Posts

Showing posts from December, 2015

Urse madare aazam makanpur shareef

urse madare aazam makanpurr shareef26/27/28;February /2016 Friday,/Sutarday/Sunday ko,darul noor makanpur shareef .me Apni Riwayati Shan o Shaokat k Saath Clebrate (munnaqid)hoga ,, 27,February sham(evening)me  Time:3:50 Am.me khanqahe madariya me Rasme sajjadagi, takhte nasheeni, aamade, kashti, shagle dammal,hoga  Sadrul mashaikh Syed md Mjeebul baqi miyajafari madari sadar sajjada nasheen haqiqi o maoroosi gaddi nasheen khanqahe madariya me shahi khanqahj libaas me haazir hogen aur Rasme sajjadagi ada karegen aur tamam zaaireen aastana k liye duaa karegen, baad namaze esha,moazaz hazraat ko dastaare khilafat se nawaze gen, (jaari karda) haweli.sajjadagi by:wali ahad khanqahe madariya  syed Zafar mujeeb madari nayab sajjada nasheen makanpur shareef  plz contact mobil 919838360930

Emaane abu taalib ایمان ابوطالب

[11/3, 1:01 AM] QAISAR RAZA: شیخ عبد الحق محدث دھلوی رحمتہ اللہ تمام اختلافات بیان کرنے کے بعد لکھتے ھیں کہ"" صاحبِ جامع الاصول نقل کرتے ھیں کہ انکے اھلبیت نے گمان کیا ھے کہ ابو طالب دنیاسے مسلمان گئے واللہ اعلم بصحتہ
مدارج النبوةج۲  صفحہ ۸۴۲

شیخِ محقق اسی کتاب کے صفحہ ۷۸ پر لکھتے ھیں کہ ""غرضیکہ حضرت ابوطالب کا حضوراکرم صلی اللہ علیہ وسلم کی اعانت وامداد حمایت ورعایت کرنا اور آپکی مدح وثناکرنا آپکی شان کو بڑھانا اور آپکے مرتبہ کواونچا کرنا انکے اشعارواخبار میں بکثرت موجود ھے اسکے باوجود علماء کھتے ھیں وہ ایمان نھیں لائے اور مسلمان ھوکر اس جہان سے نھیں گئے اسکے جواب میں علماء فرماتے ھیں کہ گوکہ انھوں نے زبان سے اقرار نھیں کیا مگر دل سے تصدیق کی اورانکی جانب سے اذعان وقبول اوراطاعت وجود میں نھیں آیا اوروہی تصدیق واقرار معتبر ھے جواذعان وقبول اورانقباد تسلیم کیساتھ شامل ھو ""نیز اسی کتاب کے صفحہ ۴۰ اور ۷۸ پر انکے ایمان کی بھی روایت نقل کی ھے اور صفحہ ۸۰ پر انکی تکفیر سے متعلق سکوت اور صرفِ نظر کا حکم دیا ھے
[11/3, 1:01 AM] QAISAR RAZA: دیکھ رھا ھوں کہ فدا…

Emaane abu taalib part2 ایمان ابوطالب

دیکھ رھا ھوں کہ فدائے کفروشرک بھت دیر سے سیدنا ابوطالب سلام اللہ علیہ کے ایمان کی روایت کامطالبہ کررہا ھے جبکہ مدعینِ ایمان متعدد دلائلِ شرعیہ یکے بعدیگرے پیش کررہے ھیں مگر اسکا جنھم سب کچھ ھضم کرتا جارھا ھے لھذا اگر واقعی روایتِ ایمان بغرضِ طلبِ حق مانگی جارہی ھوگی تو امید قوی ھے کہ اب انھیں کافر کھنے کی جراءت نھیں ھوگی

روایت نمبر۱

قَالَ العباس واللہ لقد قالَ اخی الکلمتہ اللتی امرتہ بھا
یعنی حضرت سیدنا عباس رضی اللہ تعالیٰ عنہ نے اللہ کے رسول سے کہا خداکی قسم میرے  بھائی نے وہ کلمہ پڑھ لیا ھے آپ انھیں جس کلمہ کے پڑھنے کا حکم دے رھے تھے
روض الانف مع سیرت ابن ھشام ج ۱ صفحہ ۲۸۵

حضرات! سیدناسرکار ابوطالب رضی اللہ تعالیٰ عنہ کے کلمہ پڑھ لینے کی یہ وہ شھادت ھے جو اسی وقت دی گئی جس موقع پر آپ سے تلقینِ کلمہ کا معاملہ درپیش تھا
اس روایت کے ہوتے ھوئے وہ روایتں  کیونکر دلیلِ کفر بنائی جاتی ھیں جنکے راویان نہ تو اس مجلس میں موجود تھے اور نہ ھی حضرت عباس سے زیادہ ثقہ وقوی ھیں


روایت نمبر ۲

اِنَّ اللہ تعالیٰ احیاللنبئِ صلیٰ اللہ تعالیٰ علیہ وسلم عمَّہ اباطالب وامنابہ
یعنی اللہ تعالیٰ نے آقا علیہ …

ایمان ابوطالب تسری قسط emane abu taalib part 3

[11/3, 12:55 AM] QAISAR RAZA: ایمان ابوطالب کے تعلق       سے ھمارا موقف


اس تعلق سے کوئی بھی بات کرنے سے پہلے ھم  اپنا موقف تحریر ی شکل میں پیش کردینا مناسب جانتے ھیں
 سیدنا ابوطالب رضی اللہ تعالیٰ عنہ کے ایمان واسلام کے تعلق سے اھلسنت کے علماء مختلف الرَّائے ھیں

۱ ایک گروہ انکے ایمان واسلام کاقائل ھے

۲ دوسراگروہ انکے ایمان وکفر پر سکوت کا قائل ھے

۳ تیسرا گروہ انکے کفر پر یقین رکھتا ھے


ھم قائلین ایمان کیساتھ ھیں اور انھیں کے طرفدار بھی

اھلِ سکوت پر ھم بھی سکوت کرتے ہوئے انکے سکوت کو انکی نیک نیتی پر محمول کرتے ھیں

البتہ جو طبقہ انکے کفر پر بضد ھے اور  شدت کیساتھ انکی تکفیر  کوازقبیلِ  واجبات گردانتاھے ھم انھیں نھیں جانتے مگر شریرالنفس کفر پسند فدائے شرک جانثار جھل


اس سلسلے میں ایک ضروری بات یہ بتادوں کہ جن محدثین نے انکے کفرکی روایتیں نقل ھیں وہ صرف نقل کرکے خاموش ھوگئے ھیں یازیادہ سے زیادہ کسی کا اس بابت موقف ذکر کردیا ھے بقیہ بذاتِ خود کسی نے  اپنا کوئی اصرار یا مطالبہ نھیں ظاھر فرمایاھے
جسطرح کہ آجکل  کچھ تکفیری حضرات انکے کفر پر اڑے ھوئے ھیں

ماضی قریب کے علماء ھند میں سے مفتی احمد…

Emaane abu taalib 4

ایمان ابو طالب

: ایمان ابو طالب رضی اللہ تعالی عنہٗ پر میرا موقف:-


در بار ایمان ابو طالب اہل سنت میں تین گروہ پائے جاتے ہیں۔ ایک ایمان کا قائل ہے دوسرا کفر پرانتقال کا اور تیسرا گروہ سکوت اختیار کرتا ہے۔

ہم ایمان ابو طالب کے قائلین کے گروہ کے طرف دار ہیں۔ جو لوگ کفر کے قائل ہیں ان سے صرف نظر کرتے ہیں اور ان کے اس عمل کو رسول اور آل رسول کی نا راضگی کا سبب جانتے ہیں۔

الحاصل میرے نزدیک سیدنا ابو طالب مؤمن ہیں۔

محمد شفیق حنفی

سلام مسنون
               الہی آبرو رکھ لیجیئو ایمان والوں کی
               یہ دنیا کر رہی ہے ذکر ایمان ابوطالب

📚ایمان کا لغوی معنیٰ اور اسکی تحقیق:-

ایمان امن سے ماخوذ ہےاور امن کا معنی ہے نفس کا مطمئن ہونا، اور خوف کا زائل ہونا، امن، امانت اور امان اصل میں مصادر ہیں۔ امن انسان کی حالت امن کو کہتے ہیں، انسان کے پاس جو چیز حفاظت کے لیئے رکھی جائے اس کو امانت کہتے ہیں۔
ایمان کا استعمال کبہی اس شریعت کو ماننے کے لیئے کیا جاتا ہےجس کو حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم اللہ کے پاس سے لے کر آئے۔ (اکابرین کے نزدیک) تصدیق بالقلب، اقرار باللسان،اور عمل بالارکان میں سے ہر ایک …

ایمان ابوطالب پر ایک معلوماتی تحریر

ایمان.ابوطالب پرایک معلوماتی
ایمانِ ابوطالب 
         سلام اللہ علیہ 

پیارے آقا سیدنا محمد مصطفیٰ  علیہ السلام      کے مشفق ومھربان  چچا محسنِ اسلام شیخ المسلمین آقا ومولیٰ سیدنا  ابو طالب  رضی اللہ تعالیٰ عنہ خالص مومن وموحد ومسلمان تھے 


        از قلم 

محمد قیصر رضا علوی حنفی مداری خادم درس وافتاء جامعہ عزیزیہ اھلسنت ضیاءالاسلام دائرة الاشراف جھراؤں ضلع سدھارتھنگر یوپی 

🔦🔦🔦🔦🔦

دیکھ رہا ھوں کہ مسئلۂ ایمان ابوطالب کو لیکر  گروپ کافی گرم چل رہاھے اور اھل علم کے درمیان دھواں دھار بحث جاری ھے قائلین ایمان دلیل ایمان لیکر اور منکرینِ ایمان دلیلِ کفر لیکر اپنے اپنے موقف پر ڈٹے ھوئے ھیں 
کوئی کسی بھی صورت میں اعتدال ووسطیت کو ھاتھ لگانے کیلئے تیار نھیں ھے
 منکر چاھتاھے کہ ساری دنیا منکرایمان بن جائے

 قائل چاھتاھے ساری دنیا قائل ایمان ھوجائے 

یہ فقیر حقیر اس بابت عرض کرتا ھے کہ 
""کفر ابو طالب پر جتنی ساری روایتیں ھیں وہ سب درایتہً ناقابلِ قبول  اور بالکل من گڑھنت وجعلی ھیں ""

ھماری مذکورہ تحریر  پر احباب اھلسنت میں سے کچھ حضرات اختلاف ظاھر فرماسکتے  ھیں 
لھذا میں ان تمام حضرات سے …

فاضل بریلوی اور ایمان ابوطالب

اپنا موقف تحریر کردیا  اپنا موقف تحریر کرنے کے بعد وکیلِ کفر سے اپنے ان معروضات کا جواب چاھتا ھوں تاکہ بات باضابطہ طور پر  آگے بڑھ سکے چنانچہ    جب فاضلِ بریلوی کے نزدیک  سرکارِ بطحاء سیدنا ابوطالب سلام اللہ علیہ کا کفر آیاتِ ظاھرہ احادیثِ باھرہ و  متعدداقوال مفسرین وفقھاء سے قطعیت کیساتھ ثابت اور روشن اس طرح سے کہ اسکے انکار کیلئے کسی سنی میں مجالِ دم زدن نھیں جیسا کہ انھوں نے شرح المطالب میں لکھا   نیز احکامِ شریعت ج۱ میں فرمایا کہ ""مذھب وعقیدۂ کفر پرمطلع ہوکر اسکے کفر میں شک کرے توالبتہ کافر ھوجائگا ""
وکیلِ کفر جواب دیں کہ مثبتِ کفر فاضلِ بریلوی کی ان تحریرات کی روشنی میں علامۂ اجل شیخ دحلان مکی قدس سرہ سرکارِ بطحاء سیدنا ابوطالب رضی اللہ تعالیٰ عنہ کو مسلمان وصاحبِ ایمان لکھکر  کافر ھوئے کہ نھیں؟؟؟ 
اور پھر انھیں فاضلِ بریلوی "سیدنا وشیخنا المولیٰ تغمداللہ بالرحمتہ والرضوان قدس سرہ وغیرہ لکھکر اور ان سے سند حدیث کی اجازت لیکر مسلمان رھے یا نھیں؟؟؟  ساتھ ہی فاضلِ بریلوی کے والد پر بھی کیا حکمِ شرع عائد ھوگا اسکی بھی وضاحت کردی جائے 

اور ایک مسئلہ یہ بھی …

ایمان ابوطالب پر خانقاہ مداریہ مکنپور شریف کا موقف

ایمان ابو طالب پر ہمارا موقفحضرت علامہ مفتی قیصر رضا مداری 9838360930 9792176276 www.qutbulmadar.org ایمان ابوطالب کے تعلق       سے ھمارا موقف 

اس تعلق سے کوئی بھی بات کرنے سے پہلے ھم  اپنا موقف تحریر ی شکل میں پیش کردینا مناسب جانتے ھیں   سیدنا ابوطالب رضی اللہ تعالیٰ عنہ کے ایمان واسلام کے تعلق سے اھلسنت کے علماء مختلف الرَّائے ھیں 
۱ ایک گروہ انکے ایمان واسلام کاقائل ھے 
۲ دوسراگروہ انکے ایمان وکفر پر سکوت کا قائل ھے 
۳ تیسرا گروہ انکے کفر پر یقین رکھتا ھے 

ھم قائلین ایمان کیساتھ ھیں اور انھیں کے طرفدار بھی 
اھلِ سکوت پر ھم بھی سکوت کرتے ہوئے انکے سکوت کو انکی نیک نیتی پر محمول کرتے ھیں 
البتہ جو طبقہ انکے کفر پر بضد ھے اور  شدت کیساتھ انکی تکفیر  کوازقبیلِ  واجبات گردانتاھے ھم انھیں نھیں جانتے مگر شریرالنفس کفر پسند فدائے شرک جانثار جھل 

اس سلسلے میں ایک ضروری بات یہ بتادوں کہ جن محدثین نے انکے کفرکی روایتیں نقل ھیں وہ صرف نقل کرکے خاموش ھوگئے ھیں یازیادہ سے زیادہ کسی کا اس بابت موقف ذکر کردیا ھے بقیہ بذاتِ خود کسی نے  اپنا کوئی اصرار یا مطالبہ نھیں ظاھر فرمایاھے  جسطرح کہ آجکل  کچھ …

مسلک اعلحضرت اور حاضر کی ایک نئی بدعت

مسلک.اعلحضرت عصر حاضر کی ایک.نئی.بدعت.....................حضرت علامہ مفتی قیصر رضا حنفی مداری حفظہ اللہ ازقلم حق رقم...تعالی 🌹مسلک اعلی حضرت عصر حاضر کی بد عت 🌹
دور حاضر کی جدید اصطلاح ""مسلک اعلیٰ حضرت ""کے استعمال    پر  ایک فکر انگیز  تحریر جسے سنجیدگی کیساتھ پڑھنا اہلسنت کے  خواص وعوام پر لازم ہے آپ نے اگر ٹھنڈے دل سے پڑھا تو آپ سمجھ جا ئینگے کہ یہ نئی اصطلاح چند غیرمخلص اور ضدی مزاج علماء ء کے ذہن کی  پیدا وار ہے جس کا  خود فاضلِ بریلوی سے بھی کوئی  تعلق نہیں 
محبان محترم احبابِ اہلسنت!!  یہ بات کون نہیں جانتا کہ حضور ختمی مرتبت سیدنا محمد رسول اللہ صلیٰ اللہ علیہ وآلہ وسلم نے اور آپکے نائبین نے تمام فرقہاےُ باطلہ کے درمیان بحیثیت گروہِ ناجیہ اہلسنت وجماعت کو ممتاز فرمایا اور خیر القرون سے لیکر آج تک تمام تر اہل اللہ اسی جماعتِ حقّہ کی ایک کڑی بن کر رہے اور تمام اولیاء کاملین وعلماء ربَّا نیئین اپنے اپنے ادوار میں حتّٰی المقدور ا سی جماعت حقہ کے عقائد و معمولات کی حفاظت واشاعت کے لئے سر بہ کفن نظر آئے تاریخ شاہد ہے کہ فقہاء کرام و مجتہد ین  عظام کے دور میں ج…